Urdu

سابقہ نیب افسر کے خلاف انکوائری میں ہوشربا انکشافات

کراچی: نیب کی کرپشن میں ملوث سابقہ نیب افسر کے خلاف انکوائری میں ہوشربا انکشافات سامنے آئے ہیںنیب کے سابق افسر ضمیر عباسی نے این آئی سی وی ڈی سے کیا کیا فائدے حاصل کیے؟؟،عجب کرپشن کی غضب کہانی کے حقائق سامنے آنے پر تفتیشی افسر نے سر پکڑ لیا۔ ریجنل ٹیلی گراف کو معلوم ہوا ہے کہ سابقہ نیب افسر ضمیر عباسی اس وقت سیکرٹری لوکل گورنمنٹ بورڈ تعینات ہیں اور انہیں طاقتور ترین افسر مانا جاتا ہے۔ یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ ضمیر عباسی خود کو وزیراعلی سندھ کے بالمقابل طاقتور بتاتے ہیں اور سیکریٹری لوکل گورنمنٹ بورڈ ناصر حسین شاہ کے قریبی دوست بھی ہیں۔ دستیاب معلومات کے مطابق ضمیر عباسی نے 2016 میں اپنی اہلیہ کو گریڈ 19 ڈائریکٹر ایچ آر تعینات کرایا۔ ریجنل ٹیلی گراف کو این آئی سی وی ڈی مین خانصا ضمیر کے تقرری لیٹر کی کاپی موصول ہو گئی ہے ۔ یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ ضمیر عباسی نے دوستوں اور رشتے داروں کو بھی این آئی سی وی ڈی میں بھرتی کرایا۔ یاد رہے کہ نیب نے 2015 میں این آئی سی وی ڈی میں کرپشن پر انکوائری کا آغاز کیا تھا تاہم ضمیر عباسی نے انکوائری نیب سے اینٹی کرپشن سندھ منتقل کرادی تھی جس کے کچھ ہی عرصے بعد اینٹی کرپشن سندھ نے این آئی سی وی ڈی کے خلاف انکوائری ختم کردی تھی۔ ضمیر عباسی کو بدلے میں این آئی سی وی ڈی انتظامیہ نے بھرپور نوازا اور ضمیر عباسی کی اہلیہ کو بھاری تنخواہ 5 لاکھ 75 روپے کے عوض ملازمت دی گئی۔ یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ نیب ضمیر عباسی، اسامہ یونس اور زین العابدین کے خلاف بھی تحقیقات کررہا ہے۔ واضح رہے کہ ضمیر عباسی نے گرفتاری سے بچنے کے لیے سندھ ہائیکورٹ سے رجوع کرلیا ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
Close
Close