Urdu

جناح کارڈیو میں غیر قانونی بھرتیوں، زکواة اور فنڈز کی مد میں جاری رقم کرپشن کی نظر ہونے کا انکشاف

نیب کو این آئی سی وی ڈی کے بورڈ آف گورنرز میں شامل اعلی شخصیات کے خلاف ٹھوس ثبوت مل گئے

کراچی: این آئی سی وی ڈی (جناح کارڈیو اسپتال) میں غیر قانونی بھرتیوں اور زکواة اور فنڈز کی مد میں جاری رقم کرپشن کی نظر ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔ ریجنل ٹیلی گراف کو نیب کی جانب سے این آئی سی وی ڈی کے بورڈ آف گورنرز کے خلاف تحقیقات کے معاملے میں مزید معلومات حاصل ہوئی ہے جس کے مطابق اسپتال کے بورڈ آف گورنرز میں وزیر اعلیٰ سندھ، وزیر صحت، سیکرٹری صحت اور دیگر شامل ہیں اور اسپتال میں ادویات فراہمی کے منصوبوں سمیت تمام کاموں کی منظوری بورڈ آف گورنرز سے لی جاتی ہے۔ ذرائع نے ریجنل ٹیلی گراف کو بتایا کہ قمر عباسی کی سربراہی میں نیب کی ٹیم نے 7 گھنٹے تک آئی آئی وی سی ڈی کے ایچ آر آفس میں ریکارڈ کی چھان بین کی جس کے دوران نیب کو اسپتال کی بورڈ آف گورنرز میں شامل اعلی شخصیات کے خلاف ٹھوس ثبوت مل گئے۔ معلوم ہوا ہے کہ نیب ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل اسٹاف کی تقرریوں علاوہ دیگر ڈیپارٹمنٹس میں بھرتیوں، اسپتال کے ایچ آر ڈیپارٹمنٹ مارکیٹنگ، سیکیورٹی ،آڈٹ ڈیپارٹمنٹ سمیت 15 سیکشن میں تقرریوں کی بھی تحقیقات کررہا ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ افسران اور ملازمین کو بھاری تنخواہوں پر ملازمت پر رکھا گیا جبکہ چھاپے کے دوران ایم کیو ایم لندن سے وابسطہ شخص نے نیب پر دباؤ ڈالنے کے لیے اسپتال انتظامیہ نے پیرا میڈیکل اسٹاف کو کام بند کرکے احتجاج کرنے کا کہا۔ معلوم ہوا ہے کہ پانچ برسوں میں امراض قلب کےاس بڑے اسپتال کو 30 ارب روپے جاری کیے گئے جبکہ اسپتال کو 5 ارب روپے زکواة اور خیرات کی مد میں جاری کیے گئے۔ ذرائع کے مطابق زیادہ تر رقم افسران اور ملازمین کو بھاری تنخواہوں، الاونسز کی مد جاری کردی گئی، یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ این آئی سی وی ڈی میں سالانہ دو ارب روپے سے زائد تنخواہ کی مد میں جاری کیے جاتے ہیں تاہم فنڈز اور زکواة کے نام پر جاری رقم کا کافی حصہ کرپشن کی نظر ہوگیا۔ اسپتال میں گریڈ 1 سے 20 تک من پسند اور سیاسی اثر ورسوخ رکھنے والے افراد کو ملازمتیں فراہم کی گئیں، اسپتال میں 5 ہزار سے زائد ملازمین کو خلاف قانون اور میرٹ کے برعکس ملازمتیں دی گئ۔ یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ پیپلزپارٹی رہنما نوید قمر کے بھائی ڈاکٹر ندیم قمر ریٹائرمنٹ کے باوجود اسپتال میں اہم عہدے پر براجمان ہیں۔ معلوم ہوا ہے کہ ڈاکٹر ندیم قمر کو 2018 میں ریٹائرمنٹ کے بعد کنٹریکٹ پر دوبارہ تعینات کردیا گیا۔

اپڈیٹ: ریجنل ٹیلی گراف کو این آئی سی وی ڈی یعنی کراچی کارڈیو میں کرپشن کی مزید تفصیلات موصول ہوئی ہیں کیسے سیاسی عناصر نے حکومت میں موجود کرپٹ شخصیات سے مل کر کرپشن کی، معلومات کی تصدیق جاری، جلد تفصیلات شائع کردی جائیں گی

Back to top button
Close
Close